Saturday, August 15, 2015

’پاکستان ہمسایہ ممالک سے پر امن تعلقات کا خواہاں ہے‘

 
 2015 .14 اگست  
 

پاکستان کے صدر ممنون حسین نے کہا ہے کہ ملک کی سکیورٹی اور دفاع پر کوئی سمجھوتہ نہیں کیا جائے گا۔

اسلام آباد کے کنونشن سینٹر میں جمعے کو یومِ آزادی سے حوالے سے ہونے والی پرچم کشائی کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے انھوں نے واضح کیا کہ پاکستان اپنے تمام ہمسایہ ممالک بشمول بھارت کے ساتھ پرامن تعلقات چاہتا ہے، تاہم ملک کو پیش آنے والے کسی بھی خطرے کا بھر پور جواب دیا جا سکے۔

ریڈیو پاکستان کے مطابق ممنون حسین کا کہنا تھا کہ پاکستان طویل عرصے سے حالت جنگ میں ہے اور ملک سے دہشت گردی کو ختم کرنے کے لیے قوم دہشت گردوں سے نبردآزما افواج پاکستان کی پشت پر کھڑی ہے اور ملک سے بہت جلد دہشت گردی کا خاتمہ کر دیا جائے گا۔

اس موقع پر صدر نے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں قربانیاں دینے والے سکیورٹی افواج کی قربانیوں کو بھی خراجِ تحسین پیش کیا۔

صدر ممنون نے کہا کہ وہ زمانہ گزرگیا جب پاکستان تنہائی کا شکار تھا، آئندہ چند برسوں میں حالات میں بہت بہتری آئے گی۔
انھوں نے کہا کہ حکومت نے ملک میں سیاسی اور جمہوری کلچر کو مضبوط بنانے کے لیے اقدامات کیے جس کے مثبت نتائج سامنے آئے جس کی وجہ سے سیاسی جماعتوں میں برداشت کا کلچر فروغ پا رہا ہے۔

صدر ممنوں کے مطابق ملک میں جدید تعلیم کے فروغ سے قوم کو دیگر چیلنجوں کا سامنا کرنے میں مدد ملے گی۔

انھوں نے معاشی ترقی کے حوالے سے بتایا کہ معاشی بدحالی کو روکنے کے لیے حکومت تندہی سے کام کر رہی ہے، اور قوم پاک چین اقتصادی راہداری کی جلد تکمیل کے لیے حکومت کا ساتھ دے۔

اس سے قبل صدر ممنون حسین نے وزیر اعظم نواز شریف کے ہمراہ پرچم کشائی کی۔

کنونشن سینٹر میں ہونے والی پرچم کشانی کی اس تقریب میں وزیر اعظم نواز شریف، وفاقی وزرا، سیاسی جماعتوں کے قائدین، آرمی چیف جنرل راحیل شریف، بحریہ و فضائیہ کے سربراہان اور ملک کی دیگر اعلیٰ شخصیات نے بھی شرکت کی۔


 http://www.bbc.com/urdu/pakistan/2015/08/150814_mamnoon_address_rwa?ocid=socialflow_facebook

No comments:

Post a Comment